سال کا بہترین فیبلٹ کون سا؟

14,457

کیا آپ بڑی اسکرین رکھنے والا نیا موبائل خریدنا چاہتے ہیں تو اس وقت مارکیٹ میں آپ کے لیے کئی بہترین فیبلٹس موجود ہیں۔ آئیے آپ کو چند بہترین دستیاب ڈیوائسز کے بارے میں بتاتے ہیں کہ ان میں سے کس کا انتخاب زیادہ موزوں ہے۔ واضح رہے کہ یہ تمام ایسے اسمارٹ فونز ہیں جن کی اسکرین ساڑھے 5 انچ سے زیادہ ہے۔

سام سنگ گلیکسی ایس9 پلس

کسی بھی اچھے فون کو بہترین بنانا ہو تو کیا کرنا چاہیے؟ اس کی اسکرین کو بڑا کردینا چاہیے۔ سام سنگ گلیکسی ایس9 پلس اور ایس9 کے درمیان اصل فرق اسکرین کے سائز کا ہے اور اس اسکرین کو چلانے کو لیے بڑی بیٹری کا۔ خوبصورت ایمولیڈ، کویڈ ایچ-ڈی انفینٹی ڈسپلے جو گیمز کھیلتے ہوئے یا یوٹیوب استعمال کرتے ہوئے بہت زبردست لگتا ہے۔ 12 میگا پکسل کیمرا، خوبصورت شکل و صورت اور بڑا ڈسپلے پینل ایس9 پلس کو اس وقت مارکیٹ میں دستیاب بہترین فیبلٹس میں سے ایک بناتا ہے۔ لیکن اس کی سب سے بڑی خامی ہے اس کا مہنگا ہونا اور اپڈیٹس کے حوالے سے سام سنگ کی ازلی سُستی۔


ون پلس 6

اگر آپ ایسے فیبلٹ کی تلاش میں ہیں جو آپ کی جیب مکمل طور پر خالی نہ کردے تو ون پلس 6 کا انتخاب کریں۔ اس ماڈل کی سب سے خاص بات ہی اس کا ایک ایج-ٹو-ایج ڈسپلے ہے۔ المونیئم باڈی اسے بظاہر مہنگا فون بناتی ہے اور ایمولیڈ ڈسپلے بھی۔ پشت پر موجود کیمرا ڈوئیل سینسر رکھتا ہے جن میں سے ایک پورٹریٹ موڈ کو بہتر بنانے کے لیے ہے۔ اسنیپ ڈریگن کا تيز رفتار 845 پروسیسر بھی اس میں ہے اور ریم میں 6 اور 8 جی بی میں سے انتخاب کیا جا سکتا ہے۔ مختصر یہ کہ اگر سام سنگ نہیں خرید سکتے، پیسے کم ہیں تو اس سے بہتر اینڈرائیڈ فیبلٹ کوئی اور نہیں۔


ہواوی میٹ 10

ہواوی میٹ 10 خوبصورت ڈیزائن تو رکھتا ہی ہے لیکن اس میں موجود کرن 970 پروسیسر اور 4000 ملی ایمپیئر آور کی جاندار بیٹری بھی ہے۔ ڈوئیل کیمرے بھی کمال کی تصاویر لیتے ہیں۔ پھر اس میں ہیڈفون جیک بھی ہے جو ایپل کی پیروی کرتے ہوئے بہت تیزی سے اینڈرائیڈ فونز سے بھی غائب ہو رہی ہے۔


سام سنگ گلیکسی نوٹ 8

سام سنگ گلیکسی نوٹ 8 ایک بہترین فیبلٹ ہے اور اب جبکہ نوٹ 9 آنے ہی والا ہے، یہ اب بھی دیکھنے میں شاندار لگتا ہے۔ یہ واحد ڈیوائس ہے جو بڑے ڈسپلے کا مکمل استعمال کرتی ہے اور ساتھ ہی ایس-پین بھی فراہم کرتی ہے۔ 6.3 انچ کی بڑی اسکرین ایمولیڈ ہے اور ایچ ڈی آر سپورٹ رکھتی ہے۔ اسنیپ ڈریگن 835 پروسیسر اور 6 جی بی کی ریم اسے بھرپور طاقت دیتی ہے۔ 12 میگاپکسل کا ڈوئیل کیمرا بھی بہت اچھا ہے اور سافٹ ویئر کی مدد سے اسے کافی بہتر بنایا گیا ہے۔ لیکن اس کے مسائل ہیں اوسط بیٹری لائف اور مہنگا ہونا۔


ہواوی میٹ 10 پرو

میٹ 10 پرو ہواوی کی فیبلٹ لائن اپ کا موجودہ فلیگ شپ فون ہے۔ اس میں کسی بھی فیبلٹ میں ممکن بہترین ہارڈویئر ہے۔ ایچ ڈی آر کے لیے تیار ایچ ایف ڈی + اولیڈ اسکرین اس سال کی بہترین اسکرینوں میں سے ایک ہے اور وہ بھی سامنے کے رخ پر تقریباً چھائی ہوئی ہے۔ وڈیوز اور گیمنگ کے لیے تو یہ اسکرین بہت ہی زبردست ہے۔ 4000 ملی ایمپیئر آور کی جاندار بیٹری اور کرن پروسیسر میٹ 10 پرو کو 2018ء کے بہترین فیبلٹس میں لاتے ہیں۔ اس کی واحد خامی ہے ہواوی کا ایموشن یوزر انٹرفیس جو اینڈرائیڈ اوریو کا حلیہ ہی تبدیل کر دیتا ہے اور کئی بلاٹ ویئر بھی شامل کردیتا ہے۔


گوگل پکسل 2 ایکس ایل

گوگل پکسل 2 ایکس ایل کئی لحاظ سے ایک بہر فون ہے۔ 6 انچ کے اولیڈ ڈسپلے پر بیزلز کی تقریباً عدم موجودگی اسے کہیں زیادہ خوبصورت بناتی ہے۔ لیکن اصل چیز ہے اس کا سافٹویئر۔ گوگل کے اینڈرائیڈ کا اصل ورژن اس فون میں موجود ہے اور اس کا اسسٹنٹ بھی ایپل کے سری کو ہر میدان پر مات دیتا دکھائی دے رہا ہے۔ کیمرا بھی ناقابل یقین ہے۔ 12 میگا پکسل کا سینسر ہر صورت حال میں بہترین تصاویر لیتا ہے اور اس میں پورٹریٹ موڈ بھی کمال کا ہے۔ لیکن یاد رکھیں کہ پکسل 2 کی اسکرین اتنی اچھی نہیں ہے جتنی کہ اس فہرست کے دیگر فونز کی ہے۔


آئی فون 8 پلس

ایپل کا جدید ترین فیبلٹ 6ایس پلس اور 7ایس پلس جیسا ہی ہے لیکن اس آئی فون 8 پلس میں کچھ دلچسپ فیچرز بھی ہیں۔ اس کی پشت پر آپ کو دو 12 میگاپکسل کے کیمرے ملیں گے جو تصویر میں گہرائی پیدا کرتے ہیں اور معیار پر سودا کیے بغیر زوم کرنے کی بھی گنجائش رکھتے ہیں۔ ایپل نے کارکردگی کو بھی بہتر بنایا ہے کیونکہ اس میں ایک اے11 بایونک چپ ہے، ساتھ ہی 64 جی بی اسٹوریج بھی۔ ساڑھے 5 انچ کا 1080 پکسل ڈسپلے اس فہرست میں موجود کئی فونز سے کم ہے لیکن فون پھر بھی چھوٹا نہیں دکھائی دیتا۔ بیٹری بھی شاندار ہے اور دو دن باآسانی نکال لیتی ہے۔ اس کی خامیاں ہیں بھاری ہونا، آئی فون کا وہی پرانے انداز کا ڈیزائن۔