کرپٹو کرنسی اشتہارات پر پابندی کا فیصلہ واپس

فیس بک نے کرپٹوکرنسی کے اشتہارات پر پابندی کا اپنا فیصلہ واپس لے لیا ہے اور اب ایک مرتبہ پھر ان کی اجازت دے دی ہے۔

فیس بک نے رواں سال جنوری میں تمام کرپٹو اشتہارات پر پابندی لگا دی تھی اور تب فیس بک پروڈکٹ مینیجمنٹ ڈائریکٹر راب لیدرن نے کہا تھا کہ کرپٹوکرنسی کی دنیا قابل بھروسہ نہیں۔ اب وہی اپنے تازہ بلاگ میں کہہ رہے ہیں کہ گزشتہ چند ماہ میں ہم نے اپنی پالیسی کو بہتر بنانے کے طریقوں پر غور کیا اور اب چند اشتہارات کو لگانے کی اجازت دے رہے ہیں اور اس کو یقینی بنانے کے لیے بھی کام کر رہے ہیں کہ یہ محفوظ ہیں۔ انہوں نے یہ نہیں بتایا کہ فیس بک نے اپنا پابندی کا فیصلہ واپس کیوں لیا۔

فیس بک کی پالیسی کے مطابق اب اشتہار دینے والوں کو ایک آن لائن درخواست دینا ہوگی تاکہ فیس بک اس کی اہلیت کا جائزہ لے۔

یعنی تمام کرپٹو کرنسی سروسز کو اجازت نہیں دی گئی اور بائنری آپشنز اور انیشیئل کوائن آفرنگز (ICOs) پر اب بھی پابندی ہے۔

فیس بککرپٹو کرنسی