کرپٹو کرنسی پر پابندی نہیں ٹیکس

بھارت کی حکومت کرپٹو کرنسی پر پابندی کے بجائے ان پر ٹیکس لگانے پر غور کر رہی ہے۔

ایک رپورٹ کے مطابق ڈجیٹل کرنسی پر 18 فیصد گڈز اینڈ سروسز ٹیکس (جی ایس ٹی) لگانے کی ایک تجویز زیر غور ہے۔ اس وقت سینٹرل بورڈ آف انڈائریکٹ ٹیکسز اینڈ کسٹمز اس تجویز کا جائزہ لے رہا ہے اور اس کا مسودہ حتمی صورت اختیار کرلے تو اسے جی ایس ٹی کونسل میں پیش کیا جائے گا۔ ہو سکتا ہے کہ حکومت کرپٹوکرنسی پر جی ایس ٹی کو یکم جولائی 2017ء سے نافذ العمل قرار دے، جب جی ایس ٹی کا نفاذ کیا گیا تھا۔

اگر یہ تجویز منظور کرلی گئی تو یہ کرپٹو کرنسی کے حوالے سے بھارتی حکومت کی پوزیشن میں بڑی تبدیلی ہوگی۔ گو کہ حکومت نے خم ٹھونک کر کبھی کچھ نہیں کہا لیکن بھارت کا مرکزی بینک 2013ء سے کرپٹو کرنسی کے خطرات سے عوام کو آگاہ کرتا رہا ہے۔ وہ اپنے تمام متعلقہ مالیاتی اداروں کو کسی بھی کرپٹو کرنسی سے متعلق کاروبار کے لیے خدمات فراہم کرنے سے روک چکا ہے۔

کرپٹو کرنسی