آپ بغیر اشتہارات کے فیس بک استعمال کرنے پر کتنی ادائیگی کریں گے؟

1,654

آٹھ سال قبل 2010ء میں مارک زکربرگ نے ایک بار گفتگو کرتے ہوئے کہا تھا کہ فیس بک ہمیشہ مفت رہے گا۔ اب 2018ء میں زکربرگ کانگریس کے روبرو کہتے ہیں کہ "فیس بک کا ایک ورژن ہمیشہ ایسا رہے گا جو مفت ہوگا۔”

اس بیان نے ایک امکان کا دروازہ کھول دیا ہے کہ ایک دن ایسا بھی آ سکتا ہے کہ فیس بک استعمال کرنے کے لیے ادائیگی کرنا پڑے گی – جو بلاشبہ بغیر اشتہارات کے ہوگا اور زکربرگ کو اس مصیبت سے بھی دوچار نہیں کرے گا جس کی وجہ سے وہ ابھی کانگریس کے روبرو معافیاں مانگتے پھر رہے ہیں۔

لیکن کیا لوگ اشتہارات سے پاک اس فیس بک ورژن کے لیے ادائیگی کریں گے؟

ایک آن لائن سروے کے مطابق بیشتر امریکی فیس بک کے لیے کوئی پیسہ ادا کرنے کو تیار نہیں۔ 77 فیصد امریکی کہتے ہیں کہ وہ اشتہارات والے موجودہ ورژن کو ہی ترجیح دیں گے جبکہ 23 فیصد نے کہا کہ اشتہارات نہ ہونے کی صورت میں ادائیگی کریں گے۔

فیس بک اپنے صارفین کو اشتہارات پیش کرنے کے لیے ان کے ڈیٹا کو استعمال کرتا ہے اور ان اشتہارات کی مدد سے کماتا ہے۔ امریکا میں وہ فی صارف اوسطاً ماہانہ 9 ڈالرز کماتا ہے۔ اس لیے ہم کہہ سکتے ہیں کہ اگر فیس بک کا کوئی بغیر اشتہارات کا ورژن آتا بھی ہے تو وہ اس قیمت کا تو ضرور ہوگا۔

سروے کے مطابق ادائیگی کے خواہشمند افراد میں سے تقریباً 42 فیصد ایسے ہیں جن کا کہنا ہے کہ وہ 1 سے 5 ڈالرز کے درمیان رقم ادا کر سکتے ہیں۔ 25 فیصد کا کہنا ہے کہ وہ فیس بک کو 6 سے 10 ڈالرز ادا کر سکتے ہیں۔

یہ سروے 11 اپریل کو 750 امریکی بالغ شہریوں سے کیا گیا تھا۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept