ایپل آئی میک 20 سال کا ہوگیا

OLYMPUS DIGITAL CAMERA
1,258

اگر یہ پوچھا جائے کہ ایپل دنیا کے اہم ترین اداروں میں سے ایک کب بنا؟ تو ہو سکتا ہے اس کا جواب ہوگا وہ دن جب آئی میک لانچ ہوا۔

90ء کی دہائی میں فیس بک شناخت کے بحران سے گزر رہا تھا۔ اس کے دو گھریلو کمپیوٹرز ایپل II اور میک تیزی سے غیر مقبول ہو رہے تھے اور اپنے حریف اداروں کے مقابلے میں ایپل زوال پذیر تھا۔ تب 1997ء میں بانی اسٹیو جابس بطور سی ای او کمپنی میں واپس آئے اور پھر ایک سال سے بھی کم عرصے میں منظر عام پر آیا: آئی میک۔

موجودہ سی ای او ٹم کک، جنہوں نے 2011ء میں اسٹیو جابس کی وفات کے بعد ایپل کی قیادت سنبھالی، نے گزشتہ روز ٹوئٹر پر ایک وڈیو پیش کی۔ جس میں جابس 1299 ڈالرز کے آئی میک کو مستقبل کی ڈیوائس قرار دیتے دیکھا جا سکتا ہے۔

بہرحال، جنوری 1999ء میں، یعنی آئی میک کے آغاز کے بعد ایک سال سے بھی کم عرصے میں، ایپل کی سہ ماہی آمدنی تین گنا سے زیادہ ہوچکی تھی اور پھر کئی "آئی” پروڈکٹس کا آغاز ہوا۔ میوزک سافٹویئر آئی ٹیونز 2011ء میں، پہلی جنریشن کا آئی پوڈ کچھ ہی عرصے بعد، یہاں تک کہ 2007ء میں پہلا آئی فون اور 2010ء میں پہلا آئی پیڈ آیا، جنہوں نے دنیا کو تبدیل کردیا۔

آج آئی میک کی ساتویں نسل موجود ہے اور یہ پرانے ماڈلز کے مقابلے میں کافی حد تک تبدیل ہو چکا ہے۔ ایپل ترجمان کے مطابق آج کا آئی میک پہلی جنریشن کے آئی میک کے سلیپ موڈ سے بھی 96 فیصد کم بجلی خرچ کرتا ہے۔