‘بلیک ڈاٹ’ تباہی پھیلاتا ہوا

1,444

یونیکوڈ ٹیکسٹ میں ایک نیا بگ اِس وقت دنیا بھر میں تہلکہ مچائے ہوئے ہے۔ ‘بلیک ڈاٹ’ یعنی سیاہ نقطہ دراصل اینڈرائیڈ پر واٹس ایپ کے ذریعے پھیلا تھا اور یقیناً آپ کے پاس بھی کہیں سے کہیں سے آیا ہوگا۔ یہ کچھ اس طرح کا نظر آتا ہے۔

یہ اینڈرائیڈ کی ڈیوائسز کو تو کچھ دیر کے لیے جام کر دیتا ہے لیکن آئی او ایس میں یہ بگ کچھ زیادہ ہی تباہی پھیلا رہا ہے۔

اس "سیاہ نقطے” کا راز اصل میں یہ ہے کہ اس کی اسٹرنگز میں ہزاروں چھپے ہوئے یونیکوڈ کریکٹرز ہیں جو جب سسٹم انہیں پروسیس کرنے کی کوشش کرتا ہے تو یہ سی پی یو کو چکرا دیتے ہیں۔ اگر کوئی خصوصی طور پر تیار کیا گیا ٹیکسٹ بھیجا جائے تو یہ ملنے والے کا موبائل کریش کر دیتا ہے، بالخصوص آئی او ایس پر۔

لیکن یہ آئی او ایس ہی کو نہیں بلکہ دیگر پلیٹ فارمز کو بھی متاثر کر رہا ہے۔ ٹیکسٹ کے لنک کو کاپی کرنے کی کوشش کے دوران میک کی میموری کو بھی قابو سے باہر ہوتے دیکھا گیا، اس نے پروسیس میں 30 گیگابائٹ کی سویپ فائل بنا دی۔

یہ بگ آئی او ایس 11.3 اور آئی او ایس 11.4 بیٹا کو بری متاثر کر رہا ہے۔ اب جبکہ مسئلہ بڑے پیمانے پر پھیل گیا ہے تو امید ہے کہ ایپل اس کو حل کرے گا۔