دنیا کی سب سے بڑی سیمی کنڈکٹر بنانے والی کمپنی پر وائرس کا حملہ، فیکٹریاں بند

3,574

سیمی کنڈکٹر بنانے والی دنیا کی سب سے بڑی کمپنی TSMC (تائیوان سیمی کنڈکٹر مینوفیکچرنگ کو) نے وائرس ایک حملے کے بعد اپنی کئی فیکٹریاں بند کردی ہیں۔ بلومبرگ کی رپورٹ کے مطابق گزشتہ شب وائرس کے حملے سے کئی فبریکیشن ٹول متاثر ہوئے ہیں۔

TSMC دنیا کی تمام بڑی الیکٹرانکس مصنوعات بنانے کمپنیوں مثلاً ایپل، این ویڈیا، کوالکوم کے لیے چپس تیار کرتی ہے۔ کمپنی کے ترجمان نے بلومبرگ کو بتایا ہے کہ کمپنی کی مختلف فیکٹریوں میں نصب فیبری کیشن ٹولز وائرس سے متاثر ہوئے ہیں۔ کچھ فیکٹریوں کو بحال کردیا گیا ہے جبکہ کچھ فیکٹریاں ابھی تک بحال نہیں ہوسکیں۔ تاہم کمپنی کے ترجمان نے اس بات پر زور دیا ہے کہ ان کی فیکٹریاں کسی ہیکر نے ہیک نہیں کیں۔

کمپنی کی چیف فنانشل آفیسر لورا ہو (Lora Ho) نے بلومبرگ کو بتایا کہ یہ پہلا موقع نہیں کہ TSMC کی فیکٹریاں وائرس سے متاثر ہوئی ہیں لیکن ایسا پہلی بار ہوا ہے کہ کمپنی کی پروڈکشن لائن میں استعمال ہونے والے آلات کسی وائرس سے متاثر ہوئے ہیں۔ انہوں نے یہ واضح نہیں کیا کہ آیا وائرس سے متاثر ہونے آلات ایپل کے نئے پروسیسر A12 کی تیاری میں استعمال ہورہے تھے یا نہیں۔ کیونکہ اس وقت A12 کی تیاری زور شور سے جاری ہے جسے ایپل کے اسی سال جاری ہونے والے آئی فون میں استعمال کیا جانا ہے۔