یورپ نے چار مزید سیٹلائیٹ خلا میں بھیج دیے، امریکی جی پی ایس کو دھچکا

819

یورپ نے آج گیلیلیو سلسلے کے چار نئے سیٹلائیٹ خلا میں بھیجے ہیں جس سے خلا میں یورپ کے سیٹلائیٹس کی تعداد 22 ہوجائے گی، اس پیش رفت سے یورپ اپنا الگ نیویگیشن سسٹم بنانے کے قریب پہنچ گیا ہے جس سے امریکی جی پی ایس سسٹم پر اس کا انحصار کم ہوجائے گا۔

یورپی خلائی ایجنسی نے یہ نیویگیشن سیٹلائیٹ فرانس سے آریان 5 راکٹ Ariane 5 rocket کے ذریعے زمین سے 24 ہزار کلومیٹر کی بلندی پر مدار میں بھیجے ہیں۔

مجموعی طور پر یورپ کا ہدف گیلیلیو سلسلے کے 30 سیٹلائیٹ خلا میں بھیجنا ہیں، ہر سیٹلائیٹ کا وزن 700 کلوگرام ہے، شمسی توانائی سے چلنے والے یہ سیٹلائیٹ جدید ترین نیویگیشن ٹیکنالوجیز سے لیس ہیں۔

یورپ سیٹلائیٹ نیویگیشن کی عالمی مارکیٹ سے استفادہ حاصل کرنا چاہتا ہے جس کی محتاط اندازوں کے مطابق 2022 تک مجموعی قدر 250 ارب یورو (296 ارب ڈالر) تک پہنچنے کی توقع ہے۔