فیس بک، بوڑھوں کا سوشل نیٹ ورک

747

کیا فیس بک بوڑھوں کے لیے ہے؟ کیونکہ برطانیہ میں نوجوان تو مارک زکربرگ کا سوشل میڈیا پلیٹ فارم چھوڑتے جا رہے ہیں اور 55 سال سے زیادہ عمر کے افراد میں یہ تیزی سے مقبول ہو رہا ہے۔

ایک رپورٹ کے مطابق 2018ء میں برطانیہ میں 12 سے 17 سال کی عمر کے 2.5 ملین اور 18 سے 24 سال کی عمر کے 4.5 ملین افراد مستقل فیس بک صارف ہیں جو 2017ء کے مقابلے میں 7 لاکھ کم ہیں۔ اس کی وجہ ہے نوجوانوں کا اسنیپ چیٹ جیسی ایپس کی جانب راغب ہونا۔ جبکہ پچھلے سال فیس بک کے لیے سب سے نمایاں ایج گروپ 55 سال سے زیادہ عمر کے افراد کا رہا ہے۔

رپورٹ کہتی ہے کہ فیس بک پہلے نوجوانوں کو انسٹاگرام پر جانے سے روکتا رہا، یہاں تک کہ انسٹاگرام ہی خرید لیا اور اب اسنیپ چیٹ تیزی سے نوجوانوں کو اپنی جانب راغب کر رہا ہے۔ گزشتہ تین سالوں سے اسنیپ چیٹ برطانیہ کے نوجوانوں میں اپنی شرح کو دوگنا کر چکا ہے اور سوشل نیٹ ورکنگ سائٹس ایپس میں اس کا تناسب 43 فیصد ہے۔

بہرحال، حیران کن چیز 55 سے زیادہ سال کے عمر کے افراد کا فیس بک استعمال ہے اور رپورٹ میں کہا گيا ہے کہ 5 لاکھ نئے صارفین کا فیس بک پر آنا متوقع ہے۔ ایسے 6.4 ملین صارف فیس بک کے مستقل صارف رہیں گے جن کی عمریں 55 سے 65 سال ہوں گی۔ شاید اس کی پہلی وجہ یہ ہو کہ بوڑھے افراد انٹرنیٹ کی دوڑ میں کچھ پیچھے ہیں اور فیس بک پر اب آئے ہیں۔ دوسری وجہ یہ ہے کہ فیس بک کا وڈیوز اور تصاویر کا تجربہ ایسا ہے جو ان افراد کو اپنے بچوں اور ان کی اولادوں سے رابطے میں رکھنے کے لیے آسان ہے۔

ویسے گزشتہ ماہ فیس بک نے اپنی نیوزفیڈ میں بنیادی تبدیلیاں کی تھیں اور خبروں کی تعداد کم کرکے دوستوں اور اہل خانہ کی پوسٹس کو ترجیح دینے کی حکمت عملی اپنائی تھی۔

بہرحال، برطانیہ میں 32.6 ملین صارفین اب بھی فیس بک ہی سب سے مقبول سوشل نیٹ ورک ہے۔ رپورٹ کے مطابق رواں سال انسٹاگرام صارفین کی تعداد 15.7 سے 18.4 ملین تک پہنچے گی، اسنیپ چیٹ کے 14.8 سے 16.2 ملین تک جبکہ ٹوئٹر کے صارفین میں معمولی اضافہ ہوگا اور یہ 12.4 ملین سے 12.6 تک جائیں گے۔