گوگل کروم آن لائن اشتہارات بلاک کرے گا

1,126

جدھر دیکھوں، تیری تصویر نظر آتی ہے … ہم کسی اور کی نہیں بلکہ ہم اشتہارات کی بات کر رہے ہیں۔ گھر سے باہر نکلیں، سڑک پر اشتہارات، فون کھولیں تو اس پر اشتہارات، دفتر میں کمپیوٹر کھولیں تو اس پر، گھر واپس آکر ٹیلی وژن اسکرین پر، جدھر رخ کریں کوئی نہ کوئی اشتہار سامنے آ جاتا ہے۔

ٹیکنالوجی کی دنیا میں سب سے بدنام اشتہارات وہ ہیں جو ویب براؤزنگ کے دوران سامنے آتے ہیں۔ مارکیٹ میں ایسے ویب براؤزرز موجود ہیں جو اشتہارات بلاک کرنے کی صلاحیت رکھتے ہیں لیکن آپ کو ہرگز دنیا کے سب سے بڑے براؤزر ‘گوگل کروم’ سے یہ توقع نہیں ہوگی کہ وہ بھی ایسا کرے گا۔

گوگل نے جون میں اعلان کیا تھا کہ 2018ء کے اوائل میں اشتہارات کو بلاک کرنے کا آغاز کیا جائے گا۔ لیکن ظاہر ہے گوگل تمام اشتہارات بند نہیں کرے گا آخر وہ خود اشتہارات کا سب سے بڑا پبلشر ہے اور اس کی آمدنی کا بڑا حصہ انہی اشتہارات سے آتا ہے۔ دراصل گوگل نے Coalition for Better Ads یعنی اتحاد برائے بہتر اشتہارات میں شمولیت اختیار کی تھی جس کا مقصد صارفین کے لیے اشتہارات کو بہتر بنانے کے لیے صنعتی معیارات مرتب کرنا ہے۔ اس کے Better Ads Experience Program مطابق اگر ویب سائٹ ان قواعد پر پورا نہیں اترے گی تو کروم اس کے اشتہارات دکھانا بند کردے گا۔ یہ قواعد گوگل کے اپنے اشتہاری نیٹ ورک پر بھی لاگو ہوں گے۔

اس منصوبے کے تحت سب سے پہلے کون سے اشتہارات بند ہوں گے؟ بلاشبہ وہی جن سے لوگ سب سے زيادہ نفرت کرتے ہیں۔ مکمل صفحے پر پھیلے اشتہارت، ایسے اشتہارات جن میں آڈیو بھی شامل ہوتی ہے اور اچانک سامنے آنے والے اشتہارات۔

گوگل نے اس کے لیے 15 فروری کی تاریخ کا اعلان بھی کردیا ہے۔ یہ نئے معیارات مرتب ہونے کی آخری تاریخ کے 30 دن بعد کا وقت ہوگا۔ دیکھتے ہیں اس سے آن لائن اشتہارات کی دنیا میں کیا انقلاب برپا ہوتا ہے؟