گونگا فون، صرف آپ نہیں بلکہ سب کے لیے

1,439

اسمارٹ فون کے صارفین اقرار کریں گے کہ انہیں فون کے استعمال کی لت پڑ چکی ہے، چاہے ہر پانچ منٹ بعد فون پر ایک نظر ڈالنا ہو، نوٹیفکیشن چیک کرنا یا بے وجہ فیس بک، ٹوئٹر یا انسٹاگرام دیکھنا، ہم بارہا اور بلاضرورت اسکرین پر نظریں جمائے رہتے ہیں۔ یہی وجہ ہے کہ ایک ادارہ صارفین سے فون سے "ہلکا ہاتھ” رکھنے کا مطالبہ بھی کرتا ہے اور ایک نیا اور سادہ ترین اسمارٹ فون پیش کرکے اس مسئلے کا حل بھی پیش کر رہا ہے۔ "لائٹ فون 2” عام اسمارٹ فون سے درپیش "ہائپر کنیکٹیوٹی” کا خاتمہ کررہا ہے اور اپنے جیسے دیگر "گونگے فونز” (dumb phones) کے مقابلے میں کہیں زیادہ خوبصورت بھی ہے۔

نیا لائٹ فون 2 دراصل "لائٹ” نامی اسٹارٹ اپ کا دوسرا ماڈل ہے۔ ادارے نے 2016ء میں اپنا پہلا لائٹ فون جاری کیا تھا۔ پہلا لائٹ فون تو کچھ زیادہ ہی لائٹ تھا جس پر صرف کال کی جا سکتی تھی اور یہ محض 9 نمبر محفوظ رکھ سکتا تھا۔

لائٹ کہتا ہے کہ وہ اپنے فونز کا تقابل ان "بھاری” اسمارٹ فونز سے کرتا ہے جو لوگ روزمرہ زندگی میں استعمال کرتے ہیں جن میں ایپس، سروسز اور گیمز کی بھرمار ہوتی ہے۔

اصل لائٹ فون کے 10 ہزار ماڈلز فروخت ہوئے تھے اور اس نے نجی سرمایہ کاروں کی جانب سے 3 ملین ڈالرز حاصل کیے تھے، لیکن اسے تنقید کا نشانہ بھی بننا پڑا تھا کہ یہ کچھ زیادہ ہی سادہ تھا اور کسی کام کا نہیں تھا۔ لائٹ فون2 میں چند نئی خصوصیات شامل کی گئی ہیں جیسا کہ میسیجنگ اور میپس کے لیے 4جی کنکشن بلکہ اوبر بلانے کی سہولت بھی۔

لائٹ کہتا ہے کہ یہ مکمل طور پر آپ کے اسمارٹ فون کی جگہ لے سکتا ہے، اور اس کی حیثیت محض ثانوی فون جیسی نہیں۔ نئے فون نے پہلے ماڈل جیسی سادہ صورت کو برقرار رکھا ہے، اور کراؤڈفنڈنگ پلیٹ فارم انڈیگوگو پر کافی ہٹ ہو گیا ہے کہ جہاں اسے ساڑھے 3 لاکھ ڈالرز مل چکے ہیں۔ یہ اپریل 2019ء میں صارفین کو پیش کیا جائے گا اور اس کی قیمت 250 ڈالرز ہوگی۔ اس پر لائٹ او ایس نامی آپریٹنگ سسٹم چلے گا جو اینڈرائیڈ کا ایک تبدیل شدہ ورژن ہے جبکہ اس کا بلیک اینڈ وائٹ ڈسپلے ای-اِنک استعمال کرے گا۔

لائٹ کا کہنا ہے کہ نیا فون چند اہم ٹولز لائے گا جیسا کہ میسیجنگ، الارم کلاک، گھر جانے کے لیے سواری بلانا، تاکہ اپنے اسمارٹ فون سے جان چھڑا سکیں۔”