لینوو ٹو-ان-ون ونڈوز 10 لیپ ٹاپ بھی جاری

971

ایچ پی اور اسوس نے گزشتہ ماہ اپنے ARM کی طاقت سے لیس ونڈوز 10 لیپ ٹاپس متعارف کروائے تھے اور اب لینوو بھی اس میدان میں کود پڑا ہے۔ لاس ویگاس، امریکا میں جاری کنزیومر الیکٹرونکس شو (سی ای ایس) میں لینووو نے اپنے ٹو-ان-ون ڈیٹیچ ایبل ٹیبلٹ/لیپ ٹاپ ہائبرڈ Miix 630 کی رونمائی کی ہے جو ادارے کے گزشتہ Miix ٹیبلٹس سے ملتا جلتا ہے۔ یہ ڈیوائس مائیکروسافٹ سرفیس پرو جیسی لگتی ہے، اس کی اسکرین کی بورڈ سے الگ ہوکر ٹیبلٹ بھی بن جاتی ہے۔

لینوو Miix 630 کے لیے 12.3 انچ کی WUXGA+ اسکرین استعمال کر رہا ہے، جس میں 4 اور 8 جی بی ریم کے ماڈلز دستیاب ہیں جبکہ اسٹوریج میں 256 جی بی تک کا انتخاب کیا جا سکتا ہے۔ Miix 630 میں صرف ایک یو ایس بی-سی پورٹ ہے یعنی آپ بیک وقت مختلف چیزیں کنیکٹ یا چارج نہیں کر سکتے۔ البتہ اضافی اسٹوریج کے لیے مائیکرو ایس ڈی سلاٹ ضرور ضرور ہے۔ لینوو اس میں ونڈوز ہیلو سے مطابقت رکھنے والا کیمرا بھی لا رہا ہے تاکہ آپ اپنے چہرے کے ذریعے ونڈوز 10 میں لاگ ان ہو سکیں۔

Miix 630 کا سب سے دلچسپ پہلو ہے اس کا پروسیسر، یہ کویلکوم اسنیپ ڈریگن 835 پروسیسر رکھتا ہے۔ جس کی بدولت یہ ونڈوز 10 ایس اور اے آر ایم پروسیسر رکھنے والی دنیا کی تیسری ڈیوائس ہے۔ ایچ پی اور اسوس کے ماڈلز کی طرح اس میں آپ مفت میں ونڈوز 10 پرو پر اپگریڈ ہو سکتے ہیں اور مائیکروسافٹ کے خاص ایمولیٹر کے ذریعے فل ڈیسک ٹاپ ایپس استعمال کر سکتے ہیں۔ ابھی اس کا اندازہ تو ہمیں نہیں کہ یہ کیسے کام کرتا ہے، لیکن اب تک جو ڈیوائسز دیکھی ہیں ان وہ سب ڈیفالٹ ونڈوز 10 ایس پر ہی چلتی دکھائی دیں۔

لینوو 20 گھنٹے کی بیٹری کا وعدہ کرتا ہے اور ایل ٹی ای سپورٹ بھی براہ راست میسر ہے بشکریہ کویلکوم چپ۔ اس لیپ ٹاپ کو سال کی دوسری سہ ماہی میں Miix 630 کے اجراء کا ارادہ ہے اور اس کی قیمت 799 ڈالرز ہوگی۔