مائیکروسافٹ نے چینی-انگریزی ترجمے میں بڑی کامیابی کا اعلان کردیا

799

مائیکروسافٹ کے محققین کی ایک ٹیم نے اعلان کیا ہے کہ انہوں نے مشینی ترجمے کا ایسا نظام تیار کرلیا ہے جو چینی زبان سے انگریزی میں خبریں ترجمہ کر سکتا ہے، بالکل اتنی ہی درستگی کے ساتھ جتنی کوئی انسان کرتا ہے۔

ادارے کا کہنا ہے کہ اس نے مختلف آن لائن اخبارات سے لیے گئے 2 ہزار جملوں کے نمونوں کو جانچا اور پھر انسانی ترجموں سے تقابل کیا۔ یہی نہیں بلکہ مشینی ترجمے کی درستگی کی تصدیق کے لیے دونوں زبانوں کے ماہرین کی خدمات بھی حاصل کیں۔

ایک ایسا مسئلہ جو دہائیوں سے عوام کو درپیش ہے، اس پر ایسے نتائج پیش کرنا حیران کن ہے۔ درحقیقت مشین میں زبان سمجھنا گفتکو سمجھنے سے کہیں زیادہ پیچیدہ ہے۔ مصنوعی ذہانت اور speech recognition میں ہونے والی ترقی نے وائس اسسٹنٹس کو ہمارے اسمارٹ فونز بلکہ گھروں میں بھی جگہ دی ہے۔ صارفین ان کی مدد سے اپنے روزمرہ کام کر رہے ہیں، اپنی اسمارٹ ڈیوائسز کو کنٹرول کر رہے ہیں اور خبروں اور تفریح کے لیے بھی استعمال کر رہے ہیں لیکن کسی ویب پیج یا خبر کا ترجمہ کرنا اس سے کہیں زیادہ پیچیدہ ہے اور یہی وجہ ہے کہ جب ہم ایسا کرنے کی کوشش کرتے ہیں تو عام طور پر نتیجہ جملوں اور الفاظ کے ایک نہ سمجھ میں آنے والے ملاپ کی صورت میں نکلتا ہے۔ زیادہ سے زیادہ یہ ہو جاتا ہے کہ مجموعی خیال سمجھ آ جاتا ہے کہ دراصل کہا کیا جا رہا ہے لیکن بہترین ترجمے کے ذریعے مکمل ادراک اب بھی بہت مشکل ہے۔ یہی وجہ ہے کہ طویل مضامین کے اندر کسی دوسری زبان میں کیا کہا جا رہا ہے، اس کو سمجھنے کے لیے اب بھی انسانوں کی ضرورت پڑتی ہے۔

اب دیکھنا یہ ہے کہ مائیکروسافٹ کی اس کامیابی سے مشینی ترجمے کی دنیا میں کیا انقلاب رونما ہوتا ہے۔