مائیکروسافٹ نے ونڈوز صارفین کے لیے کمانڈ لائن ریفرنس جاری کردیے

4,818

ویسے تو ونڈوز کے استعمال کنندگان کا واسطہ کمانڈ لائن کے ساتھ کم ہی پڑتا ہے تاوقتیکہ کوئی مسئلہ درپیش آ جائے اور اسے حل کرنے کے لیے کمانڈ لائن پر جا کر کمانڈز دینا پڑیں۔ لیکن اس کے باوجود ونڈوز کمانڈ لائن کی کمانڈز کے متعلق معلومات ہونا بہت ہی مفید ثابت ہو سکتا ہے۔

عام طور پر ونڈوز سے چلنے والے تمام آلات کمانڈ لائن کے حوالہ جات کے بغیر ہی دستیاب ہوتے ہیں۔ یعنی آپ کو آپریٹنگ سسٹم کی کمانڈز اور ان کے استعمال کے طریقہ کار کو خود ہی ڈھونڈنا پڑتا ہے۔

اس کے لیے ایک طریقہ کار تو یہ ہے کہ کمانڈ پرومپٹ پر جا کر "HELP” ٹائپ کریں۔ جس کے نتیجے میں ونڈوز کی مقبول کمانڈز ظاہر ہو جاتی ہیں۔ لیکن اس طریقہ میں قباحت یہ ہے کہ اس کے نتیجے میں حاصل ہونے والی کمانڈز کی فہرست بہت ہی محدود اور نامکمل ہوتی ہے۔ مثلاً اس میں cipher, mountvol, reg جیسی اہم کمانڈز کا تذکرہ ہی نہیں ہوتا۔

لیکن اس ضمن میں خوشی کی خبر یہ ہے کہ مائیکروسافٹ نے کمانڈ لائنز کے لیے خصوصی حوالہ جاتی دستاویز "Command Line Reference” کے نام سے جاری کر دی ہے۔

اس دستاویز کو ونڈوز 10، ونڈوز 8.1، ونڈوز سرور 2008، اور ونڈوز سرور 2016، اور 2012 کے R2 ورژنز کے لیے استعمال کیا جا سکتا ہے۔ گو کہ اس فہرست میں ونڈوز 7 کا تذکرہ نہیں ہے۔ لیکن ان کمانڈز کو ونڈوز 7 سے چلنے والے آلات کے لیے بھی استعمال کیا جا سکتا ہے۔

ونڈوز کمانڈ لائن کی حوالہ جاتی دستاویز کو آپ اس لنک پر کلک کر کے ڈاؤنلوڈ کر سکتے ہیں۔ اس کی جسامت 4.7 میگا بائٹس اور صفحات کی کل تعداد 948 ہے۔ دستاویز کے ابتدائی صفحات پر تمام حوالہ جات کی فہرست دی گئی ہے۔ آپ کسی بھی مخصوص کمانڈ کے نام پر کلک کریں گے تو اس کمانڈ کے متعلقہ صفحہ پر پہنج جائیں گے۔ جہاں سے آپ اس کی تمام تفصیل معلوم کر سکتے ہیں۔

مثال کے طور پر اگر آپ bcedit کمانڈ کو منتخب کریں گے۔ تو آپ کے سامنے اس کا صفحہ ظاہر ہو جائے گا۔ جہاں اس کمانڈ کی اہمیت، اس کی ترکیب و نحو (Syntax)، اس کے متعین کردہ میعار اور پیرامیٹرز کی تفصیل اور اضافی نوٹس جیسی تمام معلومات درج ہوں گی۔ صرف یہی نہیں بلکہ مائیکروسافٹ ویب سائٹ پر اس کمانڈ سے متعلقہ تمام دیگر وسائل کے لنکس بھی موجود ہوں گے۔

مائیکروسافٹ کی جانب سے جاری کردہ اس ضخیم حوالہ جاتی دستاویز یعنی کمانڈ لائن ریفرنس میں ونڈوز کی 250 کمانڈز کی تفصیل دی گئی ہے۔ جو کہ ونڈوز استعمال کرنے والے کاروباری اور گھریلو افراد کے لیے یکساں طور پر مفید ثابت ہو سکتی ہے۔ پی ڈی ایف کاپی ہونے کی وجہ سے نا صرف اس میں کمانڈز کو تلاش کرنے کی آسانی ہے بلکہ اگر آپ چاہیں تو اسے پرنٹ کر کے اپنی لائیبریری کی زینت بھی بنا سکتے ہیں۔

ونڈوز کی کمانڈ لائن ریفرنس کی پی ڈی ایف کاپی کو ڈاؤنلوڈ کرنے کے لیے کلک کریں۔