تصاویر کی کراپنگ کے لیے ٹوئٹر پر مصنوعی ذہانت کا استعمال

646

ٹوئٹر دنیا کے معروف ترین سوشل میڈیا اداروں میں سے ایک ہے اور اپنی سروس کو بہتر سے بہترین بنانے کے لیے ہمیشہ تگ و دو کرتا رہتا ہے۔ اب اس نے اپنے سوشل نیٹ ورک پر تصاویر کو بہتر انداز میں پیش کرنے کے لیے مصنوعی ذہانت یعنی Artificial Intelligence کا استعمال شروع کردیا ہے۔

ہزاروں نیورل نیٹ ورکس کی تربیت کے بعد اب ٹوئٹر زیادہ بہتر انداز میں سمجھتا ہے کہ صارف کو کسی بھی تصویر کا کون سا حصہ دیکھنے میں دلچسپی ہو سکتی ہے؟ مثلاً ادارے نے ایک ٹوئٹ میں موجود تصویر دکھائی ہے جو ہوائی جہاز کے ایک پر کی ہے۔ پرانا آٹومیٹنگ امیج کراپنگ نظام اس میں پر کا تو چھوٹا حصہ دکھاتا ہے لیکن زیادہ تر تصویر میں آسمان ہی نظر آ رہا ہے۔ نیورل نیٹ ورکس کی مدد سے بہتر پریویو تقریباً پورا پر دکھا رہا ہے، جو صارفین کو تصویر کو زیادہ بہتر انداز میں سمجھنے میں مدد دے گا۔

یہ نیا امیج کراپنگ سسٹم چہروں کے معاملے میں بھی زیادہ بہتر کام کرتا ہے۔ پہلے ایسا ہوتا تھا کہ پورٹریٹ تصاویر میں تو بالخصوص چہرہ ہی غائب ہو جاتا تھا۔ لیکن اب مصنوعی ذہانت سے لیس نظام کسی بھی تصویر میں چہرے کی اہمیت کو سمجھتا ہے اور پری ویو میں اسے لازمی دکھاتا ہے۔

یہ نیا امیج پری ویو سسٹم اب نہ صرف ٹوئٹر کی اینڈرائیڈ اور آئی او ایس ایپس پر موجود ہے بلکہ ویب سائٹ پر بھی بخوبی کام کررہا ہے۔