سونی نے 48 میگا پکسل کا کیمرا سینسر پیش کردیا

4,602

وہ زمانے گئے جب فوٹو گرافی کے شوقین لوگ ڈی ایس ایل آر خریدنے پر بھاری رقم خرچ کرتے تھے۔ اگرچہ پروفیشنل فوٹو گرافر کی اولین ترجیح آج بھی ڈی ایس ایل آر ہی ہے، لیکن شوقیہ فوٹو گرافی کرنے والوں میں سے اکثر اب ڈی ایس ایل آر سے اسمارٹ فونز پر منتقل ہوگئے ہیں۔ اس بات کو نظر میں رکھتے ہوئے اسمارٹ فون بنانے والی کمپنیاں نت نئے اور جدید کیمروں پر مبنی اسمارٹ فون تواتر سے پیش کرتی رہتی ہیں۔ اگر یہ کہا جائے کہ ان کمپنیوں کے درمیان بہترین کیمرا بنانے کی دوڑ لگی ہوئی ہے تو غلط نہ ہوگا۔ اس دوڑ میں سونی اپنے نئے 48 میگا پکسل کیمرا سینسر کے ساتھ کودا ہے۔

سونی نے اس سینسر کا جس کا نام IMX586 ہے، کا اعلان کرتے ہوئے بتایا کہ یہ کیمرا مستقبل کے اسمارٹ فونز میں بہترین تصاویر کھینچنے کی صلاحیت پیدا کرے گا ۔ سونی کا یہ سینسر اس وقت دستیاب کسی بھی کیمرا سینسر سےدو ہاتھ آگے ہے۔

IMX586 سینسر میں ہر پکسل کا رقبہ صرف 0.8 مائیکرون ہے۔ لیکن اتنے چھوٹے سائز کی وجہ سے کم روشنی میں تصاویر کھینچے کی صلاحیت متاثر ہوتی ہے۔ اسی لیے سونی نے وہی تکنیک اپنائی ہے جو کہ ہواوے اپنے کیمرا سینسر ز میں استعمال کرتا ہے، یعنی چار پکسلز کو ملا کر ایک پکسل بنانا، اس طرح 48 میگا پکسل کے سینسر سے 12 میگا پکسل کی تصویر حاصل ہوتی ہے۔

کمپنی کے مطابق اس سینسر کے نمونے اسی سال ستمبر میں اسمارٹ فون بنانے والی کمپنیوں کے بھیجنے شروع کردیئے جائیں گے۔ جس کے بعد توقع ہے کہ اگلے سال تک اس سینسر پر مبنی اسمارٹ فونز بھی مارکیٹ میں آجائیں گے۔