ٹیبلٹس کی فروخت میں کمی لیکن ایپل سب سے آگے

676

صرف بٹ کوائن اور کرپٹوکرنسی ہی نہیں بلکہ تازہ ترین اعداد و شمار کے مطابق ٹیبلٹس کی فروخت میں بھی تیزی سے کمی آ رہی ہے۔ آئی ڈی سی نامی ادارے کی جانب سے جاری کردہ اعداد و شمار کے مطابق گزشتہ سال دنیا بھر میں ٹیبلٹس کی فروخت میں 6.5 فیصد کمی آئی جس کے ساتھ نئے ٹیبلٹس کی فروخت گھٹ کر سالانہ 163.5 ملین یونٹس رہ گئی ہے۔

مجموعی طور پر آنے والی اس کمی کے باوجود ایپل اپنے ٹیبلٹس کی فروخت کو بڑھانے میں کامیاب رہا جو گزشتہ سے پیوستہ سال میں 42.6 ملین سے بڑھ کر پچھلے سال 43.8 ملین تک پہنچ گئی۔ یوں ایپل 27 فیصد مارکیٹ پر قابض ہے۔ دوسرے نمبر پر موجود سام سنگ اور چوتھے پر موجود لینوو، دونوں کی فروخت میں کمی واقع ہوئی ہے جبکہ تیسرے نمبر پر موجود ایمیزن اور چوتھے پر ہی موجود ہواوی نے اپنی فروخت میں اضافہ کیا ہے ۔ یہ اعداد و شمار ظاہر کرتے ہیں کہ ایپل کی اس مارکیٹ پر گرفت کتنی مضبوط ہے؟

آئی ڈی سی نے پایا کہ عام ٹیبلٹس کی فروخت میں کمی کے باوجود ڈی ٹیچ ایبلز (detachables) کی فروخت میں اضافہ ہوا ہے جو سال بہ سال میں 1.2 فیصد ہے۔ سال 2017ء کی آخری سہ ماہی میں کہ جب تعطیلات کے موسم میں خریداری عروج پر ہوتی ہے، ڈی ٹیچ ایبلز 10 فیصد اضافے کے ساتھ 6.5 ملین یونٹس کی فروخت تک پہنچے۔